Breaking News
Home / آرٹیکلز / اب لاکھوں روپے کی ضرورت نہیں، وہ پھول جس کے ذریعے کینسرجیسے مرض کا علاج ممکن ہوگیا

اب لاکھوں روپے کی ضرورت نہیں، وہ پھول جس کے ذریعے کینسرجیسے مرض کا علاج ممکن ہوگیا

گلوب نیوز!برسلز(ویب ڈیسک) بیلجیئم کے ماہرین صحت نے کہا ہے کہ آبی نرگس کے پھولوں میں پائے جانے والے الکلائیڈز پیچیدہ سرطانی رسولیوں کو پھیلنے سے روکتے ہیں۔ بیلجیئم کی یونیورسٹی لایبر ڈی بروکسیلیس (یوایل بی) کے ماہرین کی جدید تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ آبی نرگس کے خوبصورت پھولوں میں ’ہیمانتھیمائن‘ نامی ایک الکلائیڈ پایا جاتا ہے جو کینسر

پھیلنے سے روکتا ہے۔ماہرین کے مطابق کینسر کے ہر خلیے میں رائبوسوم پائے جاتے ہیں جسے ’نینومشینز‘ بھی کہا جاتا ہے ۔ سرطانی رسولیاں خود کو بڑھانے کے لئے رائبوسوم کو ہائی جیک کرکے اپنے لیے پروٹین بنانے پر مجبور کردیتی ہیں۔ تحقیق کے دوران ہیمانتھیمائن کو جب کینسر کی رسولیوں پر آزمایا گیا جس نے رائبوسوم کو پروٹین بنانے سے باز رکھا اور دوسرے مرحلے میں رسولی کو بڑھنے سے روک دیا ۔ تحقیق اب اس مراحل میں ہے کہ نرگس سے اخذ کردہ یہ الکلائیڈ کہیں صحت مند خلیات کو تو نقصان نہیں پہنچاتا ۔ اگلے مرحلے میں ماہرین اس پھول کے مزید چار الکلائیڈز نکال کر ان کی آزمائش کریں گے۔

About admin

Check Also

اگر آپ بے روزگار ہیں اور کوئی روگار نہیں ملتا تو سورۃ فاتحہ کا یہ چھوٹا سا عمل کریں اور کمال دیکھیں

اگر آپ مالی طور پر بہت ہی پریشانی کا سامنا کر رہے ہیں یا آپ …

Leave a Reply

Your email address will not be published.